15

امتحانات و مارکنگ بروقت اور شفاف بنانا اولین ترجیح ہے،چیئرمین تعلیمی بورڈ ملتان

ملتان(سٹاف رپورٹر)چیئرمین تعلیمی بورڈ ملتان حافظ محمد قاسم نے کہا ہے کہ امتحانات اور مارکنگ بروقت اور شفاف بنانا اولین ترجیح ہے‘ امتحانی سنٹرز کی سخت چیکنگ ہوگی‘قابل اساتذہ سے پیپر مارکنگ کرائی جائے گی‘کرپشن برداشت نہیں‘ تمام کام میرٹ پرہوں گے‘طلباوطالبات کے لئے زیادہ سے زیادہ آسانیاں پیدا کریں گے‘ آفس کے دروازے سب کے لئے ہر وقت کھلے ہیں‘دفتر کے کمیٹی روم میں میڈیا بریفنگ میں انہوں نے کہا کہ چاروں اضلاع کے سی ای اوز ایجوکیشن سے میٹنگ کرکے قابل اساتذہ کی خدمات پیپرمارکنگ کے لئے لی جائیں گی،امتحانی نظام کو شفاف بنایاجائے گا‘غفلت و بے ضابطگی سامنے آنے پر امتحانی سنٹرز کے سپرنٹنڈنٹ‘ ڈپٹی سپرنٹنڈنٹ و نگران عملے کے خلاف رولز کے مطابق کارروائی ہوگی‘انہیں فوری فارغ کردیاجائے گا،انہوں نے بتایا کہ گزشتہ روز فرسٹ ائر کے 10امتحانی سنٹرزکا اچانک دورہ کیا تو 2امتحانی سنٹرز کا عملہ کرسیوں پر بیٹھا آرام کررہا تھا جس پر دونوں سنٹرز کے عملے کو فارغ کردیا گیا اور آئندہ امتحانی ڈیوٹی کے لئے نا اہل قرار دے دیا گیا ہے،انہو ں نے کہا کہ بوٹی مافیا کو ہرگز برداشت نہیں کیاجائے گا‘امتحان میں ناجائز ذرائع استعمال کرنے پر نہ صرف امیدواروں کے خلاف سخت ایکشن ہوگا بلکہ متعلقہ امتحانی عملہ کو سخت ایکشن کا سامنا کرنا پڑے گا اور اس سلسلے میں کسی سے بھی کوئی رعایت نہیں کی جائے گی‘ کوئی سفارش نہیں مانی جائے گی نہ ہی کوئی دباؤ قبول کیاجائےگا۔انہو ں نے کہاکہ ایسا سسٹم بنائیں گے کہ طلباوطالبات کو تعلیمی بورڈ
کے چکر نہ لگانے پڑیں بلکہ ان کے تمام کام فوری طور پر کردئیے جائیں‘آن لائن سروسز جاری ہیں تاہم تعلیمی بورڈ کی سروسز کو بہتر سے بہترین کیاجائے گا،انہو ں نے امتحانی سنٹروں میں بجلی کی لوڈشیڈنگ اور بجلی کا متبادل انتظام نہ ہونے کے باعث طلبہ کے گرمی اور حبس میں پسینے میں شرابور ہونے کے سوال پر کہا کہ اس سلسلے میں متعلقہ سی ای اوز سے بات کی جائے گی اور اس بات کو یقینی بنایاجائے گا کہ امتحانی سنٹرز میں بجلی کےمتبادل انتظام کے طور پر جنریٹرز فراہم کئے جائیں،تاکہ طلباوطالبات پرسکون ہو کر پیپر دے سکیں،انہو ں نے بتایا کہ نہم سالانہ امتحان2021اگست سے شروع ہوگا،جس کیلئے تمام امیدواروں (پرائیویٹ+ریگولر)کو رول نمبر سلپس جاری کی جا چکی ہیں،پرائیویٹ امیدواروں کو رول نمبر سلپس ان کے گھر کے پتہ پر ارسال کی جاچکی ہیں تاہم رول نمبر سلپس بذریعہ آن لائن حاصل کرنے کی سہولت بھی موجود ہے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں