19

امن کے قیام میں ضلعی امن کمیٹی ممبران کا کردار بہت اہمیت کا حامل ہے،ڈپٹی کمشنر علی شہزاد

ملتان(سٹاف رپورٹر)ضلعی امن کمیٹی کے ممبران نے محرام الحرام کے موقع پر مثالی امن کے قیام کے لئے انتظامیہ کا ہرقدم پر ساتھ دینے کا اعلان کیا ہے،امن کمیٹی کے ممبران نے ترقیاتی منصوبوں کے معیار پر بھی اطمینان کا اظہار کیا اور عیدالاضحیٰ کے موقع پر بہترین صفائی پر ڈپٹی کمشنر علی شہزاد کو خراج تحسین پیش کیا ہے،ضلعی امن کمیٹی کا اجلاس ڈپٹی کمشنر علی شہزاد اور سی پی او منیر مسعود مارتھ کی صدارت میں منعقد ہوا،جس میں تمام مکاتب فکر کے علماءاور ممبران نے شرکت کی،ڈپٹی کمشنر علی شہزاد نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ محرم الحرم کے سلسلے میں تمام انتظامات مکمل کر لئے گئے ہیں،انہوں نے کہا کہ امن کے قیام میں ضلعی امن کمیٹی کے ممبران کا کردار بہت اہمیت کا حامل ہے،موجودہ بین الاقوامی صورتحال کے پیش نظر بہت محتاط ہونے کی ضرورت ہے،وقت کا تقاضا ہے کہ اپنی صفوں میں اتحاد پیدا کیا جائے،علی شہزاد نے کہا کہ حکومت کسی بھی سازش سے نمٹنے کے لئے مکمل طور پر الرٹ ہے،ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ عاشورہ محرم کے موقع پر صفائی کے بہترین انتظامات کئے جائیں گے،انہوں نے کہا کہ ترقیاتی منصوبوں کے معیار پر کوئی سمجھوتہ نہیں ہو گا،ضلع میں کسی بھی ترقیاتی منصوبے میں ناقص میٹیریل استعمال کرنے والوں کا احتساب ہو گا،علی شہزاد نے کہا کہ پاکستان کو کورونا کی چوتھی لہر کا سامنا ہے،امن کمیٹی کے ممبران ویکسی نیشن کے لئے کردار ادا کریں،انہوں نے کہا کہ مجالس کے دوران کورونا ویکسی نیشن کیمپ لگائے جائیں گے،سی پی او منیر مسعود مارتھ نے کہا کہ محرم الحرام کے موقع پر امن وامان برقرار رکھنے کے لئے ہوم ورک مکمل کر لیا ہے،سکیورٹی ادارے تمام حالات پر نظر رکھے ہوئے ہیں،اگر کہیں بھی قانون کی خلاف ورزی ہوئی تو قانون حرکت میں آئے گا،اجلاس میں علامہ فاروق خان سعیدی، پروفیسر مظہر گیلانی، علامہ احمد حنیف جالندھری،مولانا خالد محمود ندیم،علی رضا گردیزی، علامہ عبدالحق مجاہد، خاور حسنین بھٹہ،مزین عباس چاون، مولانا سلیم بلالی،مفتی عثمان پسروری،مولانا حفیظ اللہ شاہ مہروی، سید حسن رضا مشہدی، مفتی ہدایت اللہ رحمانی, علامہ کریم نقوی،سلطان محمود،ظفراقبال صدیقی، زاہد بلال قریشی،آصف اخوانی، ایوب مغل،عزیز الرحمان انصاری،مظہر جاوید نے شرکت کی،قبل ازیں ڈپٹی کمشنر علی شہزاد اور سی پی او منیر مسعود مارتھ کی زیرصدارت بین المذاہب ہم آہنگی کمیٹی کا اجلاس منعقد ہوا،جس میں مختلف مذاہب سے تعلق رکھنے والے نمائندہ افراد نے شرکت کی،اجلاس میں سردار جی رویندر سنگھ،سکھ دیو رائے، قیصر پرویز اور شکلہ دیوی ،سید مظہر گیلانی، علامہ عبدالحق مجاہد ،علامہ احمد حنیف جالندھری،علامہ ڈاکٹر کریم نقوی اور رئیس احمد شریک ہوئے،ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل قمرالزمان قیصرانی بھی اس موقع پر موجود تھے،ڈپٹی کمشنر علی شہزاد نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کا آئین اقلیتی برادری کے حقوق کی ضمانت دیتا ہے،اقلیتی برادری کے مسائل کا حل ہماری ذمہ داری ہے،انہوں نے کہا کہ سکھ اور ہندو برادری کو شمشان گھاٹ کے لئے جگہ کی فراہمی کا جائزہ لیا جائے گا،علی شہزاد نے کہا کہ اقلیتی برادری کی رہائشی کالونیوں میں ترقیاتی منصوبے مکمل کئے جارہے ہیں اور سرکاری ملازمتوں میں اقلیتوں کے کوٹے پر عمل کیا جارہا ہے،سی پی او منیر مسعود مارتھ نے اپنے خطاب میں کہا کہ اسلام میں اقلیتی برادری کو جتنے حقوق حاصل ہیں کسی اور مذہب میں نہیں،انہوں نے کہا کہ اقلیتی برادری کی عبادت گاہوں کو مکمل سکیورٹی فراہم کی جارہی ہے اور انکے مذہبی تہواروں کے موقع پر بھی باقاعدہ سکیورٹی پلان تشکیل دیا جاتا ہے ،سی پی او نے کہا کہ اقلیتی برادری کے حقوق کا تحفظ ہماری مذہبی ذمہ داری بھی ہے۔کمیٹی کی ممبر شکتلہ دیوی نے کہا کہ بین المذاہب ہم آہنگی کمیٹی میں نئے ممبران بھی شامل کئے جائیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں