7

ایک اور ہاؤسنگ کالونی سکینڈل، ایک پلاٹ کئی جگہ فروخت،مالکان فراڈ کرکے غائب

میاں چنوں،علامہ اقبال ٹاؤن فیز ون کے ٹاؤن ڈوپلیرز نے شہریوں سے کروڑوں روپے ٹھگ لیے،پچاس کروڑ سے زائد کا فراڈ کرتے ہوئے ایک ایک پلاٹ تین تین لوگ لوگوں کو فروخت کردیئے بیسیوں لوگوں سے تمام اقساط وصول کرنے کے باوجود ابھی تک انتقال رجسٹری نہیں کروائے گئے،انتظامیہ کی ملی بھگت سے بغیر نقشہ منظوری ٹاؤن میں پلاٹوں کی خریدوفروخت جاری رہی،لیکن کسی نے نوٹس نہیں لیا ٹاؤن مالکان نے پارک، سکول، ڈسپنسری، مسجد ، پلے گراونڈ کا رقبہ تک فروخت کردیا تفصیلات کے مطابق علامہ اقبال ٹاؤن فیز ون میاں چنوں کے ٹاؤن ڈوپلیرز اشتیاق گجر، ندیم اشرف، ذوالفقار گجر نے شہریوں سے پچاس کروڑ سے زائد رقم کا فراڈ کرتے ہوئے خود رفو چکر ہو گئے مالکان نے ایک ایک پلاٹ تین تین لوگوں کو فروخت کرتے ہوئے شہریوں سے دھوکہ دہی کی شہریوں کو نہ ہی انتقال کروایا جارہا ہے اور نہ ہی رجسٹری کروائی جارہی ہے بغیر نقشہ منظوری کے ٹاؤن مالکان سادہ لوح شہریوں کو لوٹتے رہے لیکن انتظامیہ حرکت میں نہ آئی مالکان نے پارک، ڈسپنسری، سکول پلے گراونڈ کا رقبہ تک فروخت کردیا اپنی تمام جمع پونجی خرچ کرنے کے باوجود شہری انتقال اور رجسٹری کروانے سے محروم ہیں شہریوں عمر فاروق، عامر علی، ساجد علی، عبدالطیف ودیگر نے ڈائریکٹر نیب ملتان اور ڈائریکٹر اینٹی کرپشن ملتان ڈویڑن ملتان سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے اس سلسلے میں جب ایڈمنسٹریٹر تحصیل کونسل میاں چنوں ذیشان ندیم سے رابطہ کیا گیا تو انہوں نے کہا کہ ٹاون کی خرید فروخت میری تعیناتی سے پہلے کی ہے موقف جاننے کے لیے جب ٹاؤن مالکان اشتیاق وغیرہ سے رابطہ کیا گیا تو انہوں نے کوئی جواب نہیں دیا اور کہا کہ پراپرٹی کے کاموں میں ایسا ہوتا رہتا ہے خرید داروں کو جلد انتقالات کروا دیئے جائیں گے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں