17

بہاولپور سیکرٹریٹ کیلئے سمہ سٹہ میں 30 ایکڑ اراضی مختص

رحیم یار خان،بہاول پور،بورڈ آف ریونیو حکومت پنجاب نے بہاولپور میں جنوبی پنجاب صوبے کے لئے قائم ہونے والے مجوزہ سیکرٹریٹ کے لئے تیس ایکڑ سرکاری زمیں کی نشان دہی کر کے ڈپٹی کمشنر بہاولپور کو زمیں جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے نام منتقل کرنے کی ہدایات جاری کر دیں۔بورڈ آف ریونیو کی جانب سے جاری ہونے والے مراسلے کے مطابق مجوزہ سیکرٹریٹ بہاولپور کے نواحی قصبے سمہ سٹہ کے نزدیک ’’ذخیرہ‘‘ کے مقام پر تعمیر کیا جائے گا،جس کی تعمیر بھی عنقریب شروع ہونے کے امکانات ظاہر کئے جا رہے ہیں،جس کے لئے اطلاعات کے مطابق فنڈز بھی پنجاب کے حالیہ بجٹ مین مختص کر دیئے گئے ہیں ۔سیاسی پنڈتوں کے مطابق جنوبی پنجاب میں ایک کی بجائے دو صوبے بنائے جانے کے امکانات ظاہر کئے جا رہے ہیں جن میں سے ایک صوبہ بہاولپور ڈویژن جبکہ دوسرا ملتان اور ڈی جی خان ڈوہژنز پر مشتمل ہو سکتا ہے اور ان صوبوں کے ہیڈ کوارٹرز بہاولپور اور ملتان میں ہو سکتے ہیں اور یہی وجہ ہے کہ بہاولپور اور ملتان دونوں شہروں میں نئے سیکرٹریٹ تعمیر کئے جا رہے ہیں۔ذرائع کے مطابق سیکریٹری گورنمنٹ آف پنجاب کالونی ڈیپارٹمنٹ کی جانب سے جاری شدہ لیٹرنمبر1496-2021-1740 cs,iv بتاریخ24-6-2021 کی جانب سے ڈی سی بہاول پورکوجاری لیٹرمیں کہاگیاہے کہ گورنمنٹ آف پنجاب کالونی برانچ موضع ذخیرہ سمہ سٹہ تحصیل سٹی ضلع بہاول پور میں واقع 30 ایکٹر زمین جنوبی پنجاب سیکریٹریٹ کی بلڈنگ کی تعمیر کے لئے مفت ٹرانس فر کے آڈر کرتی ہے بہاول پورکے شہریوں نے اس امرپرتشویش کااظہار کیا کہ نواب آف بہاول پورکی جانب سے ٹرسٹ کاالاٹ کیاگیا رقبہ کسی صورت بھی کسی اورکوالاٹ نہیں کیاجاسکتاہے انہوں نے حکومت پنجاب سے فوری طورپر ان آڈرکومسنوخ کرنے کامطالبہ کیا.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں