12

تصویر بناتے نہر صادق برانچ میں3 بھائیوں میں سے ایک گرگیا

رحیم یارخان(ڈسٹرکٹ رپورٹر پی این این اردو) حافظ کالونی کے رہائشی محمد امجد کے تین بیٹے رضوان امجد،محمد ابراہیم اور عبدالرحمان دن تقریباًساڑھے 12بجے گھر سے نکلے اور پل دڑی سانگی کے مقام پر نہر صادق برانچ کی سیڑھیوں پر آ کر بیٹھے،جہاں انہوں نے تصاویر بنائی،دوران تصویر بناتے ہوئے رضوان امجد کا پاؤں پھسل گیا اور وہ نہر میں گر گیا،13سالہ چھوٹے بھائی محمد ابراہیم نے اسے بچانے کی کوشش کی نہر میں چھلانگ لگا دی،مگر وہ رضوان امجد کو بچا نہ سکا نہر کے کناروں میں لگی گھاس کو پکڑ کر جان بچانے میں کامیاب ہوگیا جبکہ رضوان امجد چلتی نہر میں لاپتہ ہوگیا،محمد ابراہیم کو مقامی افراد نے اپنی مدد آپ کے تحت نہر سے نکال لیا اور ریسکیو 1122کو کال کی ریسکیو 1122دو گھنٹے کی تاخیر کے بعد موقع پر پہنچی اور ریسکیو آپریشن شروع کردیا،ریسکیو آپریشن میں پولیس،ریسکیو1122اور مقامی افراد حصہ لے رہے ہیں،ریسکیو ذرائع کے مطابق نہر صادق برانچ میں پانی کا بہاؤ تیز ہونے کے باعث ریسکیو آپریشن میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے،مقامی افراد اور ڈوب جانے والے رضوان امجد کے والد محمد امجد کا کہنا ہے کہ ڈپٹی کمشنر رحیم یارخان اور محکمہ انہار کے عملہ کو نہر بند کرنے کی اپیل کی مگر کوئی شنوائی نہ ہوئی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں