5

رشتہ داروں نے زہر دیکر بیٹے کو قتل کیا، باپ 5ماہ بعد عدالت پہنچ گیا

ٹبہ سلطان پور(نمائندہ پی این این اردو)بیٹے کو زہر دیکر قتل کرنے کا شبہ باپ نے پانچ ماہ بعد علاقہ مجسٹریٹ کو درخواست دے دی ہارٹ اٹیک یاقتل تحقیق کیلئے رورل ہیلتھ سنٹر سے ریکارڈ طلب تفصیل کے مطابق 8؍2؍21کونواحی علاقہ پکی کھوئی کے رہائشی محمد بخش کی غیر موجودگی میں محمد بخش کے جواں سالہ بیٹے محمدساجدکی طبیعت خراب ہوجانے پر ہمسائے رشتہ دار محمدساجدکوروررل ہیلتھ سنٹرٹبہ سلطان پور لے گئے اور حالت غیر ہونے پر رورل ہیلتھ سنٹر ٹبہ سلطان پور کے ڈاکٹر نے فوری طورپرمحمدساجدکونشترہسپتال ملتان ریفرکردیااورراستے میں ہی محمدساجدکی موت واقع ہوگئی اور ہارٹ اٹیک کابتاکرمتوفی کے والدین کوتسلی دے دی گئی جبکہ بیٹے کی موت کے پانچ ماہ بعد والد محمد بخش کوشبہ ہواہے کہ میرے بیٹے کو رشتہ داروں نے زہردیکرماراہے جس کی تحقیق کے لیے محمد بخش نے گزشتہ روز علاقہ مجسٹریٹ تھانہ ٹبہ سلطان پور کو درخواست دے دی ہے موت ہارٹ اٹیک سے ہوئی یاپھرزہردی گئی رورل ہیلتھ سنٹر ٹبہ سلطان پور سے رپورٹ طلب کاروائی کا فیصلہ رپورٹ کے بعد ہوگا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں