15

سابق نااہل حکومت نے فنی تعلیم اور روزگار سے متعلق مجرمانہ غفلت کا مظاہرہ کیا،فردوس عاشق اعوان

لاہور(بیورو رپورٹ)معاون خصوصی ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ سابق نااہل حکومت نے فنی تعلیم کے فروغ اور روزگار کےحوالے سے مجرمانہ غفلت کا مظاہرہ کیا،ڈاکٹرفردوس عاشق اعوان نے اپنے ٹویٹ میں کہا کہ پی ٹی آئی حکومت وزیراعظم عمران خان کے ویژن اور وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کی قیادت میں بڑے پیمانے پر روزگار کی فراہمی کیلئے فنی تعلیم کو اولین ترجیح دے رہی ہے،وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے ٹیوٹا کے استعدادکار میں اضافہ کیلئے بھرپور اقدامات اٹھائے ہیں،سردار عثمان بزدار نے اپرنٹس شپ ایکٹ2021کا باقاعدہ اجراء کر دیا ہے،اپرنٹس شپ ایکٹ کے تحت نوجوانوں کو انڈسٹریز میں ٹریننگ دی جائے گی،اپرنٹس شپ ایکٹ سے نوجوانوں کو آن جاب ٹریننگ کی سہولت ملے گی،ڈاکٹرفردوس عاشق اعوان نے بتایا کہ پنجاب حکومت نے پاکستان کی پہلی سکل پالیسی تیار کرلی ہے،بزدارحکومت نے ٹیوٹا کے لئے تین ارب روپے کا بجٹ دیا ہے، ہنر مند نوجوانوں کو روزگارکی فراہمی کیلئے سکل پنجاب پورٹل بنایا گیا ہے۔ ٹیوٹا سیکرٹریٹ میں 120 کنال اراضی پر ملک کی تاریخ کا پہلاسکل ٹیکنالوجی پارک بننے جارہا ہے،اربن یونٹ کے اشتراک سے پنجاب کا پہلا سکل میپنگ پراجیکٹ بھی کامیابی سے جاری ہے،ڈاکٹرفردوس عاشق اعوان نے کہا کہ وزیراعلیٰ ہنرمند پروگرام کے تحت 1لاکھ سے زائد نوجوانوں کو مفت فنی تعلیم فراہم کی گئی ہے،پنجاب میں نئی ٹیکنیکل یونیورسٹیاں بنائی گئی ہیں۔ سیالکوٹ میں 17 ارب روپے کی لاگت سے عالمی معیار کی انجینئرنگ یونیورسٹی بنارہی ہے، ٹیوٹا ایشیائی ترقیاتی بینک کی ٹیکنیکل سپورٹ سے 17سینٹر آف ایکسیلنس بنانے جا رہا ہے، ٹیوٹا کے 140 اداروں میں سی بی ٹی اینڈ اے کے تحت 37 کورسز کرائے جا رہے ہیں۔ اگلے دو سال میں ٹیوٹا کے تمام اداروں کو سی بی ٹی اینڈ اے پر لیکر جائیں گے۔ پاکستان کی پہلی الیکٹرک کاربھی ٹیوٹا میں تیار ہوگی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں