20

سیکرٹری زراعت ثاقب علی عطیل کا بستی ملوک، قصبہ مڑل اور شجاع آباد کا دورہ،کپاس کی فصل کا معائنہ

ملتان(سٹاف رپورٹر)سیکرٹری زراعت جنوبی پنجاب ثاقب علی عطیل کا بستی ملوک، قصبہ مڑل اور شجاع آباد کے علاقوں کا دورہ،کپاس کی فصل کا معائنہ کیا،فیلڈ سرگرمیوں کا جائزہ لیا، فیلڈ فارمیشنز کو سرویلنس بڑھانے کی ہدایت کی،سیکرٹری زراعت جنوبی پنجاب ثاقب علی عطیل نے ملتان، بستی ملوک، قصبہ مڑل اور شجاع آباد کے علاقوں میں کپاس کی فصل کا معائنہ کیا اور فیلڈ سرگرمیوں کا جائزہ لیا،فیلڈ فارمیشنز کو سرویلنس بڑھانے کی ہدایت کی،اس موقع پرسیکرٹری زراعت ثاقب علی عطیل نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ حالیہ مون سون بارشیں کپاس کیلئے بہتر ثابت ہورہی ہیں،آبپاشی کیلئے درکار پانی کی کمی دور ہوئی ہے،فضا میں موجود نائٹروجن فصل کو میسر ہوئی ہے،جس سے فصل کی بڑھوتری کا عمل تیز ہوا ہے،انہوں نے کہا کہ کاشتکار زیادہ بارش کی صورت میں فصل سے نکاسی آب کا مناسب بندوبست کریں،بارش کے بعد حبس اور نمی بڑھنے سے چست تیلہ، گلابی سنڈی اور لشکری سنڈی کے حملہ میں اضافہ بھی ہوسکتا ہے،لہٰذا کاشتکار الرٹ رہیں اور اپنی فصل کا روزانہ کی بنیاد پر معائنہ کریں،جبکہ ہفتہ میں دوبار پیسٹ سکاوٹنگ کریں، انہوں نے کہا کہ کاشتکار سفید مکھی، تھرپس اور چست تیلہ کے حملہ کو نقصان کی معاشی حد سے نیچے رکھنے کیلئے فوری طور پر بوٹینیکل ایکسٹریکٹس (کوڑتما، تمباکو، اک، نیم اور ہنگ) کا سپرے کریں،ملی بگ کے ابتدائی حملہ کی صورت میں متاثرہ پودے پولی تھین کے بیگ چڑھاکر جڑ سے اکھاڑ دیں اور محفوظ جگہ پر زمین میں دبا دیں،جبکہ کیمیائی تدارک کیلئے پروفینوفاس بحساب 70 ملی لٹر اور بلیچ بحساب 50 ملی لٹر 20 لٹر پانی میں حل کرکے پودے کو اچھی طرح دھوئیں،گلابی سنڈی کے ابتدائی حملہ کی صورت میں مدھانی نما پھول توڑ کر تلف کریں،گلابی سنڈی کے موثر تدارک کیلئے تمباکو کے پتے 3 کلو گرام 10 لٹر صاف پانی میں ابالیں، جب پانی آدھا رہ جائے تو محلول کو صاف ململ کے کپڑے میں چھان کر 100 لٹر پانی میں حل کرکے ایک ایکڑ کپاس کے کھیت میں سپرے کریں،انہوں نے کہا کہ اگر کسی بھی کیڑے کو کنٹرول کرنے کیلئے زرعی زہر کا استعمال ناگزیر ہو تو صرف محکمہ زراعت کے ماہرین کے مشورہ سے سپرے کریں اور اس کے 4/5 دن بعد پلانٹ ایکٹریکٹس کا سپرے ضرور کریں،اس موقع پر ڈپٹی سیکرٹری آصف رضا، ڈپٹی ڈائریکٹر شاہد حسین، شیخ یوسف الرحمن، اسسٹنٹ ڈائریکٹر زراعت انفارمیشن عبدالصمد سمیت دیگر افسران بھی موجود تھے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں