12

سیکرٹری زراعت ثاقب علی عطیل کا مظفرگڑھ کا دورہ،کپاس کی فصل اور فیلڈز سرگرمیوں کا معائنہ

ملتان(سٹاف رپورٹر)سیکرٹر ی زراعت جنوبی پنجاب ثاقب علی عطیل کا مظفر گڑھ،خان گڑھ، روہیلانوالی اور علی پور کا دورہ،نمائشی پلاٹوں سمیت مختلف مقامات پر کاٹن فیلڈز کا معائنہ،فیلڈ سرگرمیوں کا جائزہ لیا۔کاشتکاروں سے ملاقات کی، مسائل بارے آگاہی حاصل کی،تفصیلات کے مطابق سیکرٹر ی زراعت جنوبی پنجاب ثاقب علی عطیل نے مظفر گڑھ،خان گڑھ، روہیلانوالی اور علی پور کا دورہ کیا،کپاس کے نمائشی پلاٹوں سمیت مختلف مقامات پر کاٹن فیلڈز کا معائنہ کیا اور فیلڈ سرگرمیوں کا جائزہ لیا،کاشتکاروں سے ملاقات کی،کپاس کی فصل بارے تبادلہ خیال کیا اور درپیش مسائل بارے آگاہی حاصل کی،اس موقع پر کاشتکاروں نے اپنی گفتگو میں کہا کہ وہ آئندہ سال زیادہ رقبہ پرکپاس کاشت کریں گے،کیونکہ کپاس کے کیڑوں کو کنٹرول کرنے کیلئے غیر روائتی طریقہ سے نہ صرف لاگت کاشت کم ہوئی ہے،بلکہ بہتر پیداوار سے فصل کپاس منافع بخش بھی ثابت ہورہی ہے،اس موقع پر سیکرٹری زراعت ثاقب علی عطیل کا کہنا تھا کہ جن کاشتکاروں نے محکمانہ ایڈوائزری پر عمل کرکے بوٹینیکل ایکٹریکٹس کے سپرے کئے ان کی فصل بہتر ہے،جبکہ اس کے برعکس کیمیکل سپرے کرنے والے کاشتکاروں کی نہ صرف فصل پر پیسٹ پریشر بڑھا ہے بلکہ ابتدائی چنائیوں میں بھی فی ایکڑ پیداوار میں واضح فرق آرہا ہے،انہوں نے مزید کہا کہ موجودہ حکومت کا زراعت کی ترقی پر مکمل فوکس ہے،فصلوں کی پیداوار میں اضافہ اور لاگت کاشت میں کمی کیلئے خصوصی اقدامات کئے جارہے ہیں،انہوں نے کہا کہ یہ کپاس کی بحالی کا سال ہے،آئی پی ایم ماڈل پر کاشتکاروں کا اعتماد بحال ہوا ہے اور اگلے سال کپاس کے تمام کاشتکاروں کو اس ماڈل کو اپنانے کی ترغیب دی جائے گی،انہوں نے مزید کہا کہ اگلے2 ہفتے کپاس کی بہتر نگہداشت کیلئے اہم ہیں،کاشتکار بارش سے متاثرہ کھِلی ہوئی کپاس کوچنائی کے بعد علیحدہ رکھیں۔ایسے کاشتکار جنہوں نے اپنی فصل سے آئندہ سال کیلئے بیج رکھنا ہے وہ بارش سے متاثرہ کپاس سے بیج نہ رکھیں،انہوں نے مزید کہا کہ حالیہ بارشوں کے بعد سفید مکھی کے حملہ میں غیر معمولی کمی آئی ہے۔کاشتکار الرٹ رہیں اور جاری کردہ ایڈوائزری کے مطابق سپرے شیڈول پر عملدرآمد یقینی بنائیں،انہوں نے کہا کہ گزشتہ دنوں کی نسبت ضلع مظفر گڑھ میں گلابی سنڈی کے حملہ میں بھی واضح کمی واقع ہوئی ہے لیکن کاشتکار محتاط رہیں اور کپاس کی فصل کا معائنہ کرتے رہیں،سفید مکھی کے کنٹرول کیلئے  7 دن کے وقفہ سے پلانٹ ایکسٹریکٹس، کوڑتما 600 گرام، تمباکو 600 گرام + نیم 600 گرام+ اک 600 گرام +ہنگ 20 گرام کے محلول کو ٹھنڈا کرکے اس میں سپائروٹیٹرامیٹ 240SC بحساب 125 ملی لٹر 100 تا 120 لٹر صاف پانی میں حل کرکے سپرے کریں۔گلابی سنڈی کے تدارک کیلئے گیما سائی ہیلوتھرین بحساب 100 ملی لٹر + تمباکو بحساب 2کلو گرام + نیم کے پتے بحساب 1 کلو گرام فی ایکڑ سپرے کریں۔ سپرے صبح یا شام کے وقت کریں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں