13

صوبائی وزیر یاسمین راشد کی زیر صدارت نشتر یونیورسٹی سنڈیکیٹ کا اجلاس،5ارب سے زائد مالیت کا سالانہ بجٹ منظور

ملتان(سٹاف رپورٹر)صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد کی صدارت میں نشتر یونیورسٹی سنڈیکیٹ کا اجلاس ہوا،اجلاس میں مختلف انتظامی امور زیر بحث آئے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے صوبائی وزیر نے کہا کہ نشتر جیسے اہم تدریسی ہسپتال میں صفائی کو مزید بہتر کیا جائے
اور ادویات کی بروقت خریداری یقینی بنائی جائے،طبی آلات و مشینری کی مرمت میں تاخیر نہ کی جائے،انہوں نے کہا کہ فرینڈز آف نشتر کمیٹی کو فعال کیا جائے فرینڈز آف نشتر ماضی۔کی طرح معمولی نوعیت کے مسائل اپنی مدد آپ کے تحت حل کرے گی،انہوں نے کہا کہ ڈاکٹرز اور طبی عملہ کے رویوں کو بہتر بنایا جائے،صوبائی وزیر نے کہا کہ پنجاب حکومت 248 ارب روپے سالانہ پنجاب کے بڑے ہسپتالوں میں دے رہی ہے ہمیں ہیلتھ سروسز کو بہتر کرنے پر توجہ دینا چاہئے،اجلاس میں نشتر یونیورسٹی کا 5 ارب سے زائد مالیت کا سالانہ بجٹ بھی زیر بحث لایا گیا اور منظوری دی گئی،ڈاکٹر یاسمین راشد نے ہدایت کی کہ نشتر یونیورسٹی کا ماسٹر پلان تیار کیا جائے اور ماسٹر پلان کے تحت مرحلہ وار عمارت کی بہتری، تعمیرو مرمت کی منصوبہ بندی کی جائے ماسٹر پلان کے تحت ہی طبی آلات کی بہتری،مرمت اور خریداری کی جائے اور ہسپتال کے ہر شعبہ کی ضروریات کو اسیس کیا جائے،انہوں نے کہا کہ بجٹ کو مالیاتی ضابطوں کو پورا کرتے ہوئے سو فیصد خرچ کریں سنڈیکیٹ اجلاس میں نشتر یونیورسٹی میں بی ایس ٹیکنالوجی پروگرام کے اجراء کی منظوری دی گئی،سینڈیکیٹ اجلاس میں 6 مختلف شعبوں ڈی سی پی،ڈی جی او،ڈی سی ایچ،ڈی ٹی سی ڈی،ڈی او ایم ایس،اور ڈی اے میں ڈپلومہ کے اجراء کی منظوری دی گئی،اجلاس میں ایم ایس نرسنگ پروگرام کی بھی منظوری دی گئی،اجلاس کے دوران سابق سینیئر آڈیٹر محمد اقبال کے زیر بحث معاملہ پر سیکرٹری سپیشلائزڈ ہیلتھ کیئر جنوبی پنجاب نادر چٹھہ ایم ایس نشتر اور ڈائریکٹر فنانس پر مشتمل کمیٹی تشکیل دی گئی،اجلاس میں سیکرٹری سپیشلائیزڈ ہیلتھ کئیر نادر چٹھہ،وائس چانسلر نشتر میڈیکل یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر رانا الطاف احمد، پرنسپل نشتر میڈیکل کالج پروفیسر ڈاکٹر افتخار حسین، ممبر سنڈیکیٹ جلال الدین رومی، پروفیسر محمد سمیع اختر، ڈائریکٹر فنانس، رجسٹرار نشتر میڈیکل یونیورسٹی پروفیسر غلام مصطفیٰ، ایم ایس نشتر ہسپتال ڈاکٹر امجد چانڈیو اور دیگر سنڈیکیٹ ممبران نے شرکت کی.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں