6

محکمہ توانائی کا جنرل ہسپتال اور میاں منشا ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر لاہور میں سولر منصوبوں کا افتتاح


ملتان(مانیٹرنگ ڈیسک)جنرل ہسپتال اور میاں منشا ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال لاہور میں محکمہ توانائی کے سولر منصوبے مکمل کر لئے گئے،محکمہ توانائی کے دو اہم منصوبے مکمل کرلئے گئے ہیں،میاں منشا ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال لاہور کو بجلی بچانے والے آلات پر منتقل کر دیا گیا ہے،جبکہ جنرل ہسپتال لاہور میں ایک میگا واٹ کا سولر منصوبہ لگا کر ہسپتال کو شمسی توانائی پر منتقل کر دیا گیا ہے،صوبائی وزیر توانائی ڈاکٹر اخترملک اور وزیر جیل خانہ جات و ترجمان حکومت پنجاب فیاض الحسن چوہان نے ان دونوں منصوبوں کا افتتاح کردیا ہے،اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر اختر ملک نے بتایا کہ میاں منشا ہسپتال میں ریٹروفٹنگ منصوبے کے تحت ، بجلی بچانے والے پنکھے، بلب ، لائٹس سمیت دیگر الات کی تنصیب مکمل کی گئی ہے،منشا ہسپتال میں بجلی بچانے والے 257 پنکھے اور 200 لائٹس لگائی گئی ہیں،بجلی بچانے والے ان آلات پر ایک کروڑ 70 لاکھ روپے لاگت ائی ہے جس سے سالانہ دو کروڑ 80 لاکھ کی بجلی بچائی جا سکے گا،انہوں نے کہا کہ جنرل ہسپتال میں ایک میگا واٹ سولر انرجی کا پلانٹ لگایا گیا ہے۔ جنرل ہسپتال کو سولر توانائی پر منتقل کرنے کے منصوبے پر آٹھ کروڑ 40 لالھ لاگت آئی ہے،جنرل ہسپتال کو سولر انرجی پر منتقل کرنے سے سالانہ تین کروڑ 80 لاکھ کی بجلی بجائی جا سکے گی،انہوں نے مزید کہا کہ رواں سال محکمہ توانائی پنجاب بھر کے پینتیس ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹرز ہسپتال سولر پر منتقل کرے گا،محکمہ توانائی پہلے ہی پنجاب بھر کے گیارہ ہزار پرائمری سکولوں کو سولر پر منتقل کر چُکا ہے جس سے اٹھارہ لاکھ طلبا کو بلا تعطل بجلی کی فراہمی ممکن ہوئی ہے،وزیر توانائی کا مزید کہنا تھا کہ پنجاب کو سولر صوبہ ڈکلئر کیا ہے،ہمارا ٹارگٹ پنجاب بھر کے 95 ہزار بجلی کے کنیکشنز کو سولر پر منتقل کرکے اڑتیس ارب روپے کا بجلی کے بل کی مد میں بوجھ کو پنجاب حکومت کے خزانہ سے کم کرنا ہے،اس موقع پر وزیر جیل خانہ جات و ترجمان پنجاب حکومت فیاض الحسن چوہان نے وزیر توانائی کو کامیاب منصوبہ بروقت مکمل کرنے پر مبارک باد دی،ان کا کہنا تھا کہ ہماری حکومت کی ترجیح عوام کو سستی اور ماحول دوست توانائی کی فراہمی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں