10

محکمہ سکول ایجوکیشن میں اربوں روپے ہڑپ ،ریکارڈ بھی غائب

ملتان،محکمہ سکول ایجوکیشن میں اربوں روپے کی بے ضابطگیوں کا انکشاف سامنے آیا ہے،تفصیل کے مطابق آڈٹ رپورٹ نے محکمہ سکولز میں ہونیو الے کرپشن کا بھانڈا پھوڑ دیا، جس میں بتایا گیا ہے کہ محکمہ سکول ایجوکیشن نے ایک ارب پچاس کروڑ پندرہ لاکھ اکتیس ہزار چار سو پچیس روپے کا ریکارڈ ہی پیش نہ کیا، رپورٹ میں محکمہ سکول ایجوکیشن میں ڈیلی ویجز ملازمین کو بغیر اجازت اور اشتہارات دیئے بغیر بھرتی کرنے کا بھی انکشاف ہوا، ڈیلی ویجز ملازمین کی بھرتیاں چلڈرن کمپلیکس لائبریری، قائد اعظم اکیڈمی اور ای ڈی او آفس رحیم یار خان میں کی گئیں۔ آڈٹ رپورٹ کے مطابق ڈیلی ویج ملازمین کو ایک کروڑ اکانوے لاکھ بائیس ہزار چھ سو تہتر روپے غیر قانونی طور پر تنخواہوں کی مد میں ادا کیے گئے، قائد اعظم اکیڈمی فار ایجوکیشن ڈویلپمنٹ کی جانب سے ٹریننگ الاونس کی مد میں ایک کروڑ چوہتر لاکھ باسٹھ ہزار پانچ سو ساٹھ کی بلاجواز ادائیگیوں کی گئیں ، قائد اعظم اکیڈمی کی جانب سے ٹرینیز کو ٹی اے ڈی اے کی ادائیگی کے بعد الاونس دیئے جانے کا کوئی جواز نہیں تھا ، جبکہ محکمہ اسکول ایجوکیشن کے ذیلی اداروں میں اڑتالیس کروڑ پانچ لاکھ پچیس ہزار ایک سو چھبیس روپوں کے ٹینڈرز کے اجراء میں پیپرا رولز کی خلاف ورزیاں کی گئیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں