25

ملتان،جعلی زرعی ادویات بیچنے پر 7 افراد گرفتار،9 مقدمات درج

ملتان(سٹاف رپورٹر)حکومت پنجاب کی ہدایت پر ملتان ڈویژن میں جعلی زرعی ادویات، کھادوں کیخلاف بڑا کریک ڈاؤن کیا گیا،محکمہ زراعت نے ایک روز میں 688 جعلی فرٹیلائزرز کی بوریاں قبضے میں لے لیں،کمشنر آفس سے جاری ڈیٹا کے مطابق ڈویژن میں 236 چھاپے مارے گئے 2 لاکھ72 ہزار روپے جرمانہ کیا گیا،جعلی زرعی ادویات انسپکشن میں 9 مقدمات درج کرکے7 افراد گرفتار کئے گئے،اس ماہ ابتک 672 چھاپوں کے دوران 9لاکھ48ہزار5سو روپے کا جرمانہ کیا گیا،10 مقدمات درج کرائے گئے اور 10 افراد کو گرفتار کیا گیا،کمشنر ملتان ڈویڑن ڈاکٹروں ارشاد احمد نے زرعی ادویات ملاوٹ مافیا کیخلاف شکنجہ کسنے کا حکم دیتے ہوئے کہا ہے کہ ڈپٹی کمشنرز ضلعی ٹاسک فورسز کے ذریعے سمپلنگ اور مقدمات درج کروائیں،پیدواری شعبے کو تباہی کا شکار کرنے والے مافیا کو قانون کے کٹہرے میں لایا جائے،زراعت ہماری معشیت کی ریڑھ کی ہڈی ہے،معاشی چیلنجز کو حل کرنے کے لئے زراعت کے مثبت کردار سے انکار ممکن نہیں،زرعی ادویات اور کھادوں کے معیار پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا،ایگریکلچر ٹاسک فورس کو فعال کرکے کسانوں کو ریلیف دینگے،کمشنر ملتان ڈویژن ڈاکٹر ارشاد احمد نے کہا کہ ڈویژن بھر میں یوریا کی کوئی کمی نہیں ہے اور فرٹیلائزرز، یوریا کھاد کی سیل کو مکمل مانیٹر کیا جارہا ہے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں