16

ملتان،ناقص اجزا سے تیار 4 ہزار 800 لٹر محلول تلف،2 پاپڑ فیکٹریوں کو جرمانہ

ملتان(سٹاف رپورٹر)پنجاب فوڈ اتھارٹی ملتان میں دوسرے روز بھی 5 بڑی پاپڑ فیکٹریوں پر چھاپے،4 ہزار 800 لٹر ناقص اجزاء سے تیار محلول تلف، 50 کلو ممنوعہ اجزاء، 20 کلو کھلا رنگ، 10 کلو مصنوعی مٹھاس ضائع، پروڈکشن یونٹس کو بھاری جرمانے عائد کئے گئے،تفصیلات کے مطابق ڈائریکٹر جنرل پنجاب فوڈ اتھارٹی رفاقت علی نسوآنہ کی ہدایت پر جنوبی پنجاب کے مختلف اضلاع میں ملاوٹ مافیا کو روکنے کیلئے فوڈ سیفٹی ٹیمیں متحرک ہیں،تفصیلات کے مطابق ملتان میں دوسرے روز بھی 5 بڑی پاپڑ فیکٹریوں پر چھاپے مارے گئے،2 پاپڑ فیکٹریوں کو 40 ،40 ہزار جبکہ 3 کو 20 ،20 ہزار روپے کے جرمانے عائد کر دئیے گئے،4 ہزار 800 لٹر ناقص اجزاء سے تیار محلول، 50 کلو ممنوعہ اجزاء، 20 کلو رنگ، 10 کلو مصنوعی مٹھاس تلف کر دی گئی،تلف کیے گئے محلول کو نوشادر، کھار، بورا اور دیگر کیمیکلز سے تیار کیا گیا تھا،ناقص اجزاء سے تیار سولیوشن سے کچا پاپڑ، سلانٹی جیسی مصنوعات تیار کی جاتی تھی،مصنوعات میں کھلے رنگ، مصنوعی مٹھاس، رنگ کاٹ، نان لیبل ممنوعہ اجزاء کی ملاوٹ بھی کی جاتی تھی،ضائع کئے گئے سولیوشن کو گندے کیمیکل ڈرموں میں سٹور کیا گیا تھا،گندے پاپڑ تیار کرکے بالخصوص ملتان بلکہ جنوبی پنجاب کے مختلف اضلاع میں سپلائی کئے جاتے تھے،اسی طرح وہاڑی میں سنیکس یونٹ کو پاپڑ کی تیاری میں ناقابل سراغ اجزاء کی ملاوٹ کرنے پر 14 ہزار اور سویٹس اینڈ بیکرز مٹھائی میں مردہ مکھیاں پائے جانے 10 ہزار روپے جرمانہ عائد کیا گیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں