8

منشیات سے پاک معاشرہ ہماری حکومت کی اولین ترجیح ہے،سبین گل خان

ملتان،ترجمان وزیراعلیٰ پنجاب وایم پی اے سبین گل خان نے کہا ہے کہ منشیات سے پاک معاشرہ ہماری حکومت کی اولین ترجیح ہے،حکومت منشیات کے عادی افراد کے علاج ومعالجہ اور صحت مند سرگرمیوں کے فروغ کیلئے حکمت عملی پر عمل پیرا ہے،ان خیالات کا اظہار انہوں نے اینٹی نارکوٹکس فورس پنجاب وملتان،شعور ترقیاتی تنظیم،شمع اور ڈی آر سی کے اشتراک سے تدارک منشیات کے عالمی دن کے موقع پر منعقدہ سیمینار سے بطور مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا،جبکہ اسسٹنٹ ڈائریکٹر اے این ایف محمد طاہر بھٹی، سپرنٹنڈنٹ دارلامان ثناءجاوید، ڈسٹرکٹ وومن پروٹیکشن آفیسر منیزہ بٹ، فوکل پرسن چائلڈ پروٹیکشن بیوروآصفہ سلیم ملک، چیف کوآرڈینیٹر گلناز کاشف، چیئرمین شیلٹر ہوم دارالامان شاہد محمود انصاری، انچارج نارکوٹکس کنٹرول محکمہ ایکسائز مجید نانڈلہ، چوہدری منصور احمد ایڈووکیٹ،ملک امیر نواز، ڈاکٹر نسیم اقبال،حکیم اقبال بلوچ، شمائلہ شاہ، چوہدری سلیم انجم، نبیل خان، آفتاب احمد، فہمیدہ کبیر ودیگر شریک تھے،اس موقع پر سبین گل خان نے مزید کہا ہے کہ تدارک منشیات کا عالمی دن اس بات کا آئینہ دار ہے کہ ہم متحد ہوکر منشیات کو جڑ سے اکھاڑ پھینکیں ،انہوں نے کہا کہ جو لوگ اس وباءمیں مبتلا ہوچکے ہیں حکومت ان کی بحالی کیلئے عملی اقدامات اٹھارہی ہے۔ ملتان میں نشے کے عادی افراد کی علاج گاہ ڈی آر سی صحیح معنوں میں متاثرہ افراد کی بحالی کیلئے نہ صرف سرگرم عمل ہے بلکہ ادارہ اے این ایف کی عملی کاوشیں بھی معاشرے کو منشیات کی وباءسے بچانے کے لیے کارگر ثابت ہورہی ہیں۔ اس موقع پر اسسٹنٹ ڈائریکٹر اے این ایف محمد طاہر بھٹی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ منشیات کی طلب ورسدکو روکنے کیلئے اے این ایف جدوجہد پر عمل پیرا ہے اور منشیات فروشوں کے قلع قمع کرنے کیلئے ہماری سرگرمیاں جاری رہیں گی۔ انہوں نے کہا ہے کہ سماجی اداروں سمیت معاشرے کے ہر فرد کی ذمہ داری ہے کہ وہ بھی ڈرگ فری سوسائٹی تشکیل دینے میں ہمارا ساتھ دیں اس موقع پر سپرنٹنڈنٹ دارلامان ثناءجاوید، ڈسٹرکٹ وومن پروٹیکشن آفیسر منیزہ بٹ، فوکل پرسن چائلڈ پروٹیکشن بیوروآصفہ سلیم ملک، چیف کوآرڈینیٹر گلناز کاشف، چیئرمین شیلٹر ہوم دا رالامان شاہد محمود انصاری، انچارج نارکوٹکس کنٹرول محکمہ ایکسائز مجید نانڈلہ نے خطاب کرتے ہوئے کہا تدارک منشیات کا عالمی دن تجدید عہد کا دن ہے کہ اس دن ہم یہ عزم صمیم کا اظہارکرتے ہیں کہ ہم منشیات کے خلاف اپنی جدوجہد کو جاری رکھیں گے۔عادی افراد کی بحالی کے ساتھ ساتھ ان کی عزت نفس کا بھی خیال رکھیں گے اور صحت مند سرگرمیوں کو فروغ دیکر معاشرے کو منشیات سے پاک کرینگے۔سمینار سے خطاب کرتے ہوئے دیگر مقررین نے کہا کہ نشے سے پاک معاشرہ بہتر مستقبل کی علامت ہے عوامی آگہی کے ذریعے ہمیں نہ صرف خود آگے بڑھنا ہوگا بلکہ اس حوالے سے جو ادارے جدوجہد کررہے ہیں ان کو بھی سپورٹ کرنا ہماری قومی ذمہ داری ہے۔26جون کے حوالے سے منعقدہ سیمینار کی خاص بات یہ تھی کہ اس میں منشیات کی سپلائی کو روکنے والے ادارے اے این ایف اور ایکسائز ڈیپارٹمنٹ، منشیات کی طلب کو روکنے کے حوالے سے عوامی آگہی کرنے والے سماجی ادارے منشیات کے عادی افراد کا علاج کرنے والے اداروں کے نمائندگان کی شرکت کے ساتھ ساتھ منشیات کے زیرعلاج مریض بھی اس آگہی سیمینار میں موجود تھے۔اس سیمینار کے موقع پر متفقہ قرار دار کے ذریعے منشیات کے عادی افراد کی عزت نفس کو ملحوظ خاطر رکھتے ہوئے فائٹرز پائلٹس فار بیٹرلائف کا نام دیاگیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں