23

وٹہ سٹہ پر 12 سالہ لڑکی سے شادی،دولہا تھانے پہنچ گیا

بورے والا،وٹہ سٹہ کی شادی،پولیس تھانہ گگومنڈی نے 12 سالہ لڑکی سے 22 سالہ نوجوان کی شادی رکوا دی،دلہا دلہن کو لیکر گھر جانے کے بجائے تھانے پہنچ گیا،تفصیلات کے مطابق نواحی گاؤں 191 (ای بی) میں مقصود نامی شخص کی بیٹی 12 سالہ (خ) کی شادی انکے قریبی رشتہ دار نوجوان بابر علی سے وٹہ سٹہ کی بنیاد پر طے پائی جب دولہا بارات لیکر لڑکی والوں کے گھر پہنچا تو گاؤں والوں نے پولیس کو اطلاع کر دی کہ 12 سالہ نابالغ بچی کی اسکے والدین شادی کر رہے ہیں جس پر تھانہ گگومنڈی پولیس نواحی گاؤں 191 (ای بی) میں شادی والے گھر پہنچی پولیس نے نکاح کی تیاری کیلئے سر پر سہرا سجائے بیٹھے دولہا بابر اسکے بھائی لڑکی کے والد کو حراست میں لے لیا جنکو تھانے لاکر پوچھ گچھ کی گئی تو لڑکی کے گھر والوں نے دولہا دلہن کا نکاح نامہ پیش کر دیا جس پر لڑکی کی عمر 18 سال جبکہ لڑکے کی 22 سال درج تھی لیکن اس نکاح نامے پر دولہا دولہن کے شناختی کارڈ کا نمبر درج نہیں تھا اور یہ نکاح نامہ بورے والا شہر کے کسی نکاح خواں سے مبینہ ساز باز کر کے درج کروایا گیا تھا جو کہ 8 جولائی کو درج کیا گیا تھا تاہم پولیس نے اس نکاح نامہ کی روشنی میں دولہن کی طرف سے شادی کیلئے رضا مندی ظاہر کرنے پر دونوں کی تھانہ سے باعزت رخصتی کر دی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں