3

وہاڑی،ڈاکٹر کی مبینہ غفلت سے کرکٹر نے تڑپ تڑپ کر جان دیدی

وہاڑی،ڈی ایچ کیو ہسپتال ڈاکٹرز کی مبینہ غفلت نوجوان کرکٹر زیادہ خون بہہ جانے کے سبب تڑپ تڑپ کر دم توڑ گیا،ڈیوٹی ڈاکٹر موبائل پر مصروف ورثا کا الزام،وزیراعلیٰ پنجاب سمیت دیگر حکام سے نوٹس کی اپیل ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال ایمرجنسی وارڈ کے باہر 63 ڈبلیو بی کے رہائشی مزمل نذیر،معظم نذیر،نرگس بی بی و دیگر نے ڈاکٹروں کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے بتایا کہ ان کے نوجوان لڑکے 19 سالہ داؤد کی کرکٹ کھیلتے ہوئے گرنے سے ٹانگ کی نس کٹ گئی جس پر ریسکیو 1122 نے اسے فوری ڈی ایچ کیو ہسپتال منتقل کردیا ہم مریض لے کر ڈیوٹی پر موجود ڈاکٹر علیم کے پاس گئے تو اس نے مریض دیکھنے کے بجائے ہم سے جھگڑنا شروع کردیا کہ اس کی سلپ لاو اس کے بغیر چیک نہیں کروں گا میں نے ڈاکٹر کو معاملہ کی سنگینی کا بتایا مگر ڈاکٹر نے سنی ان سنی کردی اور موبائل پر مصروف ہوگیا اسی طرح ایمرجنسی ٹریٹمنٹ روم میں بھی عملہ نے ہماری کوئی بات نہ سنی ہمارا نوجوان بیٹا آدھا گھنٹہ سے زیادہ دیر تک ایمرجنسی وارڈ میں تڑپتا رہا مگر کسی نے اس کا خون بند کرنے کی کوشش نہیں کی بالآخر ہمارا نوجوان تڑپ تڑپ کر جان کی بازی ہار گیا مگر کسی ڈاکٹر نے اس کو چیک تک نہ کیا متاثرین کا کہنا تھا کہ ڈاکٹروں اور انتظامیہ کی غفلت کے سبب آئے روز ڈی ایچ کیو ہسپتال میں مریض جان کی بازی ہار رہے ہیں مگر انہیں کوئی پوچھنے والا نہیں ایمرجنسی میں ڈاکٹرز موجود ہی نہیں ہوتے اور جو ایک دو ہوتے ہیں وہ موبائل اور کھانے پینے میں وقت گزار کر چلے جاتے ہیں ہماری وزیراعلیٰ پنجاب،وزیر صحت پنجاب،کمشنر ملتان اور ڈپٹی کمشنر وہاڑی سے اپیل ہے کہ فوری نوٹس لے کر ذمہ داروں کے خلاف کارروائی کی جائے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں