5

پولیس تھانہ شاہ شمس نے رشوت لیکر بیٹے کے قاتل کو ضمانت دلائی،انصاف فراہم کیا جائے،والد کی دہائی

ملتان(سٹاف رپورٹر)سکنہ بستی کائیاں پور پرانہ شجاعباد روڈکے رہائشی حافظ محمد امجد نے ملتان پریس کلب میں پریس کانفرس کرتے ہوئے کہا کہ میرا بیٹاماجد(مرحوم) حسب معمول 12 جولائی کو شام کے وقت دکان پر موجود تندور پر روٹیاں لگا رہا تھا کہ اسکا ماموں محمد شفیق نے اپنی زوجہ تسلیم اختر، بیٹوں کاشف شفیق، حسن شفیق اور دوست عمران والوٹ کے ہمراہ نے اس پر گولیوں کی بوچھاڑ کر دی اورمیرے بیٹے ماجد کو قتل کر دیا ملزمان محمد شفیق،تسلیم اخترزوجہ محمد شفیق، کاشف شفیق، حسن شفیق،عمران والوٹ کا قبضہ مافیا کا گروپ ہے اور ناجائز اسلحہ کی خریدو فروخت بھی کرتے ہیں انہوں نے زمین کے تنازع پر ناجائز میرے بیٹے کو قتل کیا ہے ملزمان کے بااثر ہونے کی وجہ سے پولیس تھانہ شاہ شمس نے بھاری رشوت لے کر کیس اتنا کمزور کر دیا ہے کہ ملزمان عبوری ضمانت کروا کر مجھے اور میرے اہل خانہ کوجان سے مارنے کی دھمکیاں دے رہے ہیں۔ حافظ محمد امجدنے اعلی حکام وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار،آئی جی پولیس،ایڈیشنل آئی جی پالیس، آر پی او،سی پی اوسے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ ملزمان محمد شفیق،تسلیم اخترزوجہ محمد شفیق، کاشف شفیق، حسن شفیق،عمران والوٹ کے خلاف سخت سے سخت کارروائی کرتے ہوئے ہمیں انصاف فراہم کیا جائے،پریس کانفرس میں چوہدری خلیل، محمد ساجد، محبوب احمد، محمد کاشف، محمد شہزاد، شہروز اختر، عثمان چشتی، محمد اختر، عبدالحنان،رانا محمد ہارون ایڈوکیٹ بھی شریک تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں