14

پولیس نظام میں‌تبدیلی کب آئے گی؟؟؟؟؟

میری نظر سے روزانہ پولیس کی تصاویر گزرتی ہیں۔ کبھی کبھی کسی تصویر کو دیکھ کر میں چونک جاتا ہوں اور یہ تصویر ان ہی میں سے ایک ہے۔ ایک پولیس ملازم کو اچھی کارکردگی پر انعام دیا جا رہا ہے لیکن اس کے چہرے پر خوشی کے کوئی تائثرات نہیں ہیں۔ اس پولیس ملازم کا چہرہ اور body language اس بات کی گواہی دے رہی ہے کہ یہ اس موقع پر بھی تنائو اور اضطراب کی کیفیت میں مبتلا ہے۔ ایسا کیوں ہے؟ میں اس پولیس اہلکار سے واقف نہیں ہوں لیکن پولیس کے نظام کو اچھی طرح سمجھ چکا ہوں۔ ایک پولیس ملازم کو جب اپنے پیشہ ورانہ امور انجام دینے کے لیئے اپنی جیب سے رقم خرچ کرنی پڑے یا پھر شہریوں کی جیب پر انحصار کرنا پڑے تو پھر اس پولیس ملازم کو دس سے بیس ہزار روپے انعام دے کر مطمئن نہیں کیا جا سکتا۔ یہ پولیس ملازم ریٹائرمنٹ کے قریب ہو گا اور اپنی طویل سروس میں خوار ہوا ہو گا۔ اگر یہ نوجوان ہوتا تو شاید اپنے چہرے پر بناوٹی مسکراہٹ لا کر تصویر بنوا لیتا اور سماجی میڈیا پر شائع کر دیتا۔ لیکن اس نے اپنے اندر کی کیفیت کا اظہار کیا۔ میں DPO پر تنقید نہیں کروں گا۔ ایک 18 یا 19 گریڈ کا DPO پولیس میں بڑے پیمانے پر اصلاحات نہیں لا سکتا۔وہ صرف ایک ضلع میں پولیس کو lead کر رہا ہوتا ہے۔ پولیس میں بڑے پیمانے پر اصلاحات سیاسی حکومت، پولیس کی قیادت(Additional IG اور IG) اور civil society لا سکتی ہیں۔ مجھے ذاتی طور پر اس تصویر کو دیکھ کر دکھ ہوا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں