13

پہلی بار جنوبی پنجاب میں زرعی ترقی کیلئے 11ارب روپے مختص کئے گئے،حسین جہانیاں گردیزی کا تقریب سے خطاب

لودھراں(نمائندہ پی این این اردو)وزیر زراعت پنجاب سید حسین جہانیاں گردیزی نے کہا ہے کہ موجود حکومت کی کسان دوست پالیسیوں کی بدولت مختلف فصلوں کی ریکارڈ پیداوار حاصل کی جارہی ہے،اس سال صوبہ کی زمینوں نے خوب سونا اگلا ہے،امسال گندم کی 2کروڑ 9لاکھ ٹن پیداوار حاصل کی گئی جوکہ ایک ریکارڈ ہے، گندم کی مجموعی پیداوار میں 8 فیصد اضافہ ہوا ہے اسی طرح چاول کی پیداوار میں 28 فیصد اور کماد میں 31فیصدریکارڈ اضافہ ہوا ہے اور کاشتکاروں کو فصل کی بہترین اوربروقت ادائیگی ہوئی ہے،زراعت کے شعبہ کیلئے  بجٹ میں 300فیصداضافہ کیا گیا ہے،پہلی دفعہ جنوبی پنجاب میں زرعی ترقی کیلئے علیحدہ 11ارب روپے مختص کئے گئے ہیں،ان خیالات کا اظہار انہوں نے ضلع کونسل ہال  لودھراں میں گندم کے پیداواری مقابلہ میں ضلع کی سطح پر پہلی پوزیشن حاصل کرنے والے کاشتکاروں کے درمیان چیک اور کسان کارڈ تقسیم کرنے کیلئے منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا،انہوں نے مزید کہا کہ پی ٹی آئی حکومت کے ویژن کے مطابق پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار کاشتکاروں کے لیے کسان کارڈ کا اجراء کیا گیا ہے جس کا مقصد دیہی پنجاب میں ڈیجیٹیل خواندگی بڑھانے کے ساتھ کسانوں کو کیش ٹرانسفر کی صورت میں براہ راست مالی معاونت فراہم کرنا ہے،کاشتکار کسان کارڈ کے ذریعے اے ٹی ایم سے براہ راست سبسڈی کی رقم حاصل کرکے بروقت کھاد، بیج اور زرعی زہریں خرید سکیں گے،جس سے ان کی پیداوار اور آمدن میں اضافہ ہو گا،کسان کارڈ کے اجراء کے تاریخی اقدام سے پنجاب میں 10لاکھ کاشتکار گھرانوں کو سالانہ اربوں روپے کی سبسڈی فراہم کی جائے گی،زرعی ایمرجنسی پروگرام کے تحت اہم فصلوں کی فی ایکڑ پیداوار میں اضافہ بیج، کھاد،زرعی زہروں اور زرعی مشینری پر سبسڈی کے علاوہ فصلات کا بیمہ اور بلا سود قرضوں کی فراہمی کے مختلف منصوبوں کے تحت سبسڈی کی رقم اب کاشتکار کسان کارڈ کے ذریعے براہ راست حاصل کر سکیں گے۔کسان کارڈ کے اجراء کے تاریخی اقدام سے کاشتکاروں کو بروقت اوربا آسانی براہ راست ان کے اکاؤنٹ میں سبسڈیز کی رقم دستیاب ہو گی،جسے وہ اپنی سہولت کے مطابق استعمال کر کے زرعی لوازمات کی بروقت خرید سے اپنی پیداوار اور منافع میں اضافہ کر سکیں گے۔اس موقع پر سیکرٹری زراعت جنوبی پنجاب ثاقب علی عطیل  نے کہا کہ کاشتکاروں کے درمیان صحتمندانہ مسابقت پیداکرنے کیلئے پیداواری مقابلے منعقد کرائے جارہے ہیں۔ حکومت کے اس اقدام سے کسانوں کی حوصلہ افزائی ہوگی اور ان کے درمیان بہترین پیداوار لینے کا رجحان بڑھے گا۔پیداواری مقابلہ جیتنے والے خوش نصیب کاشتکاروں کوبیش قیمت انعامات دئیے جارہے ہیں،ان مقابلہ جات کی بدولت نہ صرف ہماری فی ایکڑ پیداوار بلکہ ملکی مجموعی پیداوار میں اضافہ ہوگا اور ملکی معیشت مضبوط ہو گی-21 2020کے دوران گندم کے پیداوار ی مقابلہ جات میں دنیا پورکے غلام مصطفیٰ ولد محمدبوٹا نے60.92من فی ایکڑپیداوار حاصل کرکے ضلع میں پہلی پوزیشن حاصل کی،کہروڑ پکا  کے محمد شبیر ولد رحمت خان نے 57.25من کے ساتھ دوسری اور کہروڑ پکا  کے محمد شفقت ولد محمدابراہیم نے  36.85من فی ایکڑ پیدوار کے ساتھ تیسری پوزیشن حاصل کی،صوبائی وزیر زراعت نےضلع کی سطح پر پوزیشن حاصل کرنے والے کاشتکاروں میں چیک تقسیم کئے اور مبارکباد دی،تقریب میں ڈائریکٹر زراعت توسیع ملتان ڈویژن،اسسٹنٹ ڈائریکٹر زراعت انفارمیشن عبدالصمدسمیت کاشتکاروں نے شرکت کی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں