7

ڈاکٹروں کا احتجاج ،نعرے بازی

پاکستان میڈیکل کمیشن کی ڈاکٹر کش پالیسیوں کے خلاف ملتان کے ڈاکٹر زمیدان میں نکل آئے،نشتر ہسپتال میں پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن کے زیر اہتمام این ایل ای امتحان کے خلاف بھرپور احتجاج پی ایم سی کے خلاف نعرے بازی تفصیل کے مطابق نشتر ہسپتال کے مرکزی دروازے پر پی ایم اے ملتان کے صدر پروفیسر ڈاکٹر مسعود الروف ہراج کی قیادت میں ڈاکٹروں کی بڑی تعداد جمع ہوئی اس موقع پر پی ایم سی کی ناقص ڈاکٹر کش پالیسیوں کے خلاف بھرپور احتجاج کرتے ہوئے نعرے بازی کی گئی ڈاکٹر مسعود الروف ہراج، ڈاکٹر رانا خاور،ڈاکٹر ڈاکٹر شیخ عبد الخالق،ڈاکٹر حاجرہ مسعود،ڈاکٹر وسیم یوسفی، ڈاکٹر ذوالقرنین حیدر،ڈاکٹر آصف خا ن، ڈاکٹر خرم ملک،ڈاکٹر مقبول عالم سمیت دیگر کا کہنا تھا کہ پی ایم سی نے این ایل ای امتحان لینے کا فیصلہ سنا کر میڈیکل تعلیم حاصل کرنے والے طلبا و طالبات کو یہ پروفیشن چھوڑنے پر مجبور کر دیا ہے پی ایم سی کی یہی ناقص پالیسیاں جاری رہیں تو جلد پاکستان کے سب ڈاکٹر یا تو پروفیشن چھوڑ دیں گے یا باہر ملک جانے کو ترجیح دیں گے پی ایم سی نے این ایل ای امتحان لینے کا فیصلہ واپس نہ لیا تو مجبوراً احتجاج کا دائرہ کار بڑھانے پر مجبور ہوں گے ڈاکٹروں نے احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ تمام ڈاکٹر این ایل ای امتحان کا بائیکاٹ کرنے کا اعلان کرتے ہیں جبکہ بائیو میٹرک تصدیق کا جو عمل شروع کر رہے ہیں اس پر بھی شدید تحفظات ہیں اور ڈاکٹرز کی سلیکٹ نان پروفیشنل کونسل کی شدید مزمت کرتے ہیں۔پی ایم سی نے ڈاکٹر کش فیصلے واپس نہ لئے تو پنجاب کے تمام ڈاکٹر اسلام آباد لانگ مارچ کریں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں