11

کاشتکار کپاس کی سفید مکھی اور گلابی سنڈی کے تدارک کیلئے زرعی ماہرین کی سفارشات پر عمل کریں،ڈاکٹر زاہد محمود

ملتان(سٹاف رپورٹر)اس وقت کپاس کی فصل انتہائی اہم مرحلے میں داخل ہوچکی ہے اور اس نازک وقت میں کپاس کے کاشتکاروں کو چاہئے کہ وہ کپاس کے کیڑے مکوڑوں خاص کر سفید مکھی اور گلابی سنڈی کے تدارک کے لئے سی سی آر آئی ملتان یا محکمہ زراعت کے زرعی ماہرین کی سفارشات پرعمل کریں،یہ بات ڈائریکٹر سنٹرل کاٹن ریسرچ انسٹیٹیوٹ،ملتان ڈاکٹر زاہد محمود نے کاشتکاروں کے نام اپنے اہم پیغام میں کہی ہے،ان کا مزید کہنا تھا کہ اور اس وقت کپاس کی دیکھ بھال میں ذرا سی غفلت پیداور میں کمی کا باعث بن سکتی ہے،اس وقت کپاس کی فصل کے لئے سفید مکھی اور گلابی سنڈی کا کنٹرول نہایت ضروری ہے،کپاس کے کاشتکار سفید مکھی کے بالغ کے لئے اسیٹا مپریڈ150ملی لٹر یا فلونیکامڈ60گرام بحساب100لٹر پانی فی ایکڑ کے حساب سے سپرے کریں،جبکہ سفید مکھی کے بچوں کے لئے کاشتکار سپائیرو ٹیٹر میٹ125ملی لٹر+بائیو پاور250ملی لٹر کا مکسچر یا پائریپروکسیفین400ملی لٹر بحساب100لٹر پانی فی ایکڑ کے حساب سے سپرے کریں،اگر کپاس کی فصل سٹریس میں نہ ہو تو سفید مکھی کے بالغ اور بچوں سے بچاؤ کے لئے ڈائی فینتھیوران200ملی لٹر بحساب100لٹر پانی فی ایکڑ کے حساب سے سپرے کریں،جبکہ گلابی سنڈی کی مینجمنٹ کے لئے کاشتکار جنسی پھندے8 فی ایکڑ کے حساب سے کھیت میں لگائیں اور ان میں لگے کیپسول کو15تا20دن بعد تبدیل کریں زرعی زہروں کے استعمال بارے ڈاکٹر زاہد محمود کا کہنا تھا کہ گلابی سنڈی کے حملہ کے بڑھنے کی صورت میں کاشتکار سات دن کے وقفہ سے تین لگاتار زرعی زہروں کا استعمال کریں،کاشتکارپہلا سپرے سپنٹورام بحساب 100ملی لٹریاگیما سائی ہیلوتھرین بحساب100ملی لٹر فی ایکڑ بحساب 100لٹر پانی کی مقدار میں حل کرکے سپرے کریں،دوسرا سپرے کاشتکار پہلے سپرے کے7دن بعد کریں اور جن کاشتکاروں نے پہلا سپرے اگر سپنٹورام کا کیا ہے تو دوسرا گیما سائی ہیلو تھرین کا کریں اور اگر پہلا سپرے گیما سائی ہیلو تھرین کا کیا گیا ہو تو پھر دوسرا سپرے سپنٹورام کا کریں اور دوائی کی مقدار کی وہی رکھیں جو پہلے سپرے کے لئے تجویز کی گئی ہے جبکہ پانی مقدار وہی100لٹر رکھی جائے،جبکہ تیسرا اور آخری سپرے کاشتکار دوسرے سپرے کے بعد 7دن کے وقفہ سے سائپرمیتھرین+پروفینوفاس600ملی لٹر یا ٹرائی ایزوفاس+ڈیلٹا میتھرین600ملی لٹر فی ایکڑ بحساب 100لٹر پانی کی مقدار میں حل کرکے سپرے کریں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں