9

کہروڑ پکا،دوست نے قتل کرکے نعش دکان میں دفنادی،شدید بد بو سے راز فاش

کہروڑپکا شہر میں ایک ہفتہ قبل کے دوران قتل کی دوسری لرزہ خیز واردات، شہبا ز اغواکیس کا ڈراپ سین 3دن پہلے گم ہونے والے 14/15سالہ شہباز کی مسخ شدہ لاش دوست کی دکان سے بر آمد ملزم نے اعتراف جرم کر لیا،پولیس مصروف تفتیش ہے،تفصیلات کے مطابق کہروڑپکا شہر دنیا پور روڈ نزد ایڈمور پمپ کے رہائشی شہباز ولد محمد اشرف کی اپنے محلے دار مبین کے ساتھ دوستی تھی،مبین کے والد محمد رفیق نے سپیئرپارٹس کی دکان بنائی ہوئی ہے،شہباز کا مبین کے پاس آنا جانا تھا 3/4دن پہلے مقتول شہباز ملزم مبین کی دکان پر آیا اور دکان سے ملحقہ کمرے میں لے جا کر رقم کا تقاضا کیا جس پر دونوں کے درمیان لڑائی ہوگئی ملزم مبین نے طیش میں آکر شہباز کا گلا دبا کر قتل کر دیا اور بعد میں اس کے سر پر آہنی راڈ سے وار کر کے شدید زخمی کر دیا ملزم تین دن تک لاش کو ٹھکانے لگانے کی کوشش کرتا رہا لیکن لاش کو دوسری جگہ منتقل کرنے میں ناکام رہا اْدھر مقتول شہباز کے والدین نے پولیس تھانہ سٹی کو اپنے بیٹے شہباز کے اغواء کی درخواست دی پولیس نے مقدمہ درج کر کہ تلاش شروع کر دی گزشتہ روز ملزم مبین کے والد نے دکان کھولی تو شدید بد بو آنے لگی شک پر دکان سے ملحقہ کمرے میں گیا تو لاش دیکھی 15پر کال کی پولیس تھانہ سٹی کے انچارج نفری کے ہمراہ موقع پر پہنچ گئے 1122کی ٹیمیں بھی موقع پر پہنچ گئیں نعش کوقبضہ میں لے کر پوسٹ مارٹم کے لئے ہسپتال منتقل کر دیا گیا پولیس تھانہ سٹی نے کارروائی کرتے ہوئے ملزم مبین کو گرفتار کرلیا ملزم نے اعتراف جرم بھی کر لیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں